Instagram

Saturday, 30 August 2014

Rasool Ullah Sallallaho Alaehe Wasallm ki Shan E Azmat Nishan

رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی شان عظمت نشان
٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭
ابن عساکر حضرت سلمان فارسی رضی اللہ تعالٰی عنہ سے راوی ،
حضور سید المرسلین صلی اللہ تعالٰی علیہ وسلم سے عرض کی گئی :
اللہ تعالٰی نے موسٰی علیہ السلام سے کلام کیا.................. عیسٰی علیہ السلام کو روح القدس سے بنایا................ ابراہیم علیہ السلام کو اپنا خلیل فرمایا............ آدم علیہ السلام کو برگزیدہ کیا...... حضور صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کوکیا فضل دیا؟
فوراً جبرائیل امین علیہ الصلٰوۃ والتسلیم نازل ہوئے۔۔۔۔۔۔۔۔ اورعرض کی حضور کا رب ارشاد فرماتاہے :
اگر میں نے ابراہیم کو خلیل کیا ، تمہیں حبیب کیا...........اوراگر موسٰی سے زمین میں کلام فرمایا ، تم سے آسمان میں کلام کیا......اوراگرعیسٰی کو روح القدس سے بنایا تو تمہارا نام آفرینشِ خلق سے دوہزار برس پہلے پیدا کیا.......... اوربیشک تمہارے قدم آسمان میں وہاں پہنچے جہاں نہ تم سے پہلے کوئی گیا نہ تمہارے بعد کسی کو رسائی ہو.................. اوراگر میں نے آدم کوبرگزیدہ کیا تمہیں ختم الانبیاء کیا......... اور تم سے زیادہ عزت وکرامت والا کسی کو نہ بنایا........ قیامت میں میرے عرش کا سایہ تم پر گُسترد ہ ..... اورحمد کا تارج تمہارے سر پرآراستہ ....... تمہارا نام میں نے اپنے نام سے ملایا............. کہ کہیں میری یاد نہ ہو، جب تک تم میرے ساتھ یاد نہ کئے جاؤ .........اوربیشک میں نے دنیا واہل دنیا کو اس لئے بنایا ............کہ جو عزت ومنزلت تمہاری میرے نزدیک ہے ان پر ظاہر کروں .......... اگر تم نہ ہوتے میں دنیا کو نہ بناتا۔
(تاریخ دمشق الکبیر باب ذکر عروجہ الی السماء الخ داراحیاء التراث العربی بیروت ۳ /۲۹۶ ۲۹۷)